Subscribe Us

Breaking

Friday, February 11, 2022

ہندوستان کے شرمناک اور عجیب و غریب رسم و رواج

ہندوستان کے دس شرمناک اور عجیب و غریب رسم و رواج ہندوستان کے دس شرمناک اور عجیب و غریب رسم و رواج
ہندوستان کے دس شرمناک اور عجیب و غریب رسم و رواج


ہندوستان اپنی چکا چوند سر گرمیوں اور گلیمرس کی وجہ سے بہت مشہور ہے ہندوستان جہاں اپنے آپ کو ایک بڑا جمہوری ملک سمجھتا ہے اور آئی ٹی کی صنعت میں خوب ترقی کر رہا ہے وہیں پر اس جدت،جمہوریت اور گلیمرس کے ساتھ ہندوستانیوں کو اس وقت شرمندگی کا سامنا کرنا پڑتا ہے جب ان کے معاشرے میں شامل عجیب و غریب روایات ان کے سامنے آ کھڑی ہوتی ہیں۔ یہ ایسی رسومات ہیں جن سے نا چاہتے ہوئے بھی وہ منہ نہیں موڑ سکتے۔

آج ہم آپ کو ہندوستان کی ایس ہی کچھ رسومات کے بارے میں بتائیں گے جو اس چمکتے دمکتے ہندوستان کے لئے شرمندگی اور دھبے سے کم نہیں۔

آگ پر چلنا

ہندوستان کے شرمناک اور عجیب و غریب رسم و رواج


ہندوستان کے مختلف علاقوں خصوصاً جنوبی ہندوستان میں ٹھیمیٹی نامی ایک فیسٹول منایا جاتا ہے کس میں لوگ ننگے پاؤں جلتے ہوئے کوئلوں پر چلتے ہیں یہ تسم اس لئے منائی جاتی ہے کہ ہندو لوگ ایسا کر کے اپنی کسی دیوی کو خراج عقیدت پیش کرتے ہیں اور مزے کی بات یہ ہے کہ وہ ان جلتے ہوئے کوئلوں پر جلدی جلدی نہیں بلکہ یوں چلتے ہیں جیسے کسی باغ میں ٹہل رہے ہوں اور پھر بعد میں انہیں اپنے پاؤں کے زخموں کا علاج کرنا پڑتا ہے اور کچھ کے پاؤں تو اس قدر جل جاتے ہیں کہ انہیں عمر بھر معذوری کا سامنا بھی کرنا پڑ جاتا ہے

بل فائٹنگ:

ہندوستان کے شرمناک اور عجیب و غریب رسم و رواج
ہندوستان کے شرمناک اور عجیب و غریب رسم و رواج


ویسے تو اسپین بل فائٹنگ کے لئے مشہور ہے لیکن ہندوستان میں بھی یہ کھیل کھیلا جاتا ہے۔ جنوبی ہندوستان میں کاشتکاری کے میلے کے موقع پر یہ کھیل رسما کھیلا جاتا ہے لیکن یہ بغیر کسی رسی اور ہتھیار کے کھیلا جاتا ہے اور چونکہ بیل ہندوؤں کے لئے مقدس ہے اس لئے اسپین کی طرح بیل کو مارا نہیں جاتا لیکن اس کھیل میں لوگوں کی ہلاکت کے بعد ہندوستانی سپریم کورٹ میں اس کھیل پر پابندی کے لئے درخواست دائر ہے جو زیر سماعت ہے۔

بالوں کی تجارت



ہندوستان میں چونکہ بہت سے مذہبی تہوار منائے جاتے ہیں اور ان منائے جانے والے مختلف تہواروں میں لوگ اپنے بال منڈواتے ہیں اور یہ بال جو عقیدت کے طور پر منائے جاتے ہیں بعد میں یہی بال دوسرے ممالک کو برآمد کیے جاتے ہیں۔ اگر ںالوں کی خرید و فروخت کے حولے سے دیکھیں تو ہندوستان اس میں سر فہرست ملک ہے۔ مندروں سے اکٹھے کیے ٹنوں کے حساب سے بال برآمد کئے جاتے ہیں عالمی سطح پر ایک کلو بالوں کی قیمت تقریباً 220ڈالر ہے کو آج سے چند سال پہلے صرف 20ڈالر تھی، اب مندروں کے اخراجات اور سماجی کام اسی حاصل شدہ رقم سے کیے جاتے ہیں۔

بیواؤں کو جلانا



اس رسم میں جس عورت کا شوہر مر جاتا ہے اس کو زندہ جلا دیا جاتا ہے یہ ایک ایسی شرمناک رسم ہے جو آج بھی ہندوستان کے کچھ علاقوں میں کی جاتی ہے حالانکہ برطانوی سامراج نے 1859میں اس پر پابندی بھی لگائی تھی لیکن آج بھی اس پر عمل کیا جاتا ہے اور اس رسم کو کرنے پر سخت ترین سزائیں بھی دی جاتی ہیں۔

بچوں کو بلندی سے نیچے اچھالنا:

ہندوستان کے شرمناک اور عجیب و غریب رسم و رواج
ہندوستان کے شرمناک اور عجیب و غریب رسم و رواج


دسمبر کے مہینے میں ریاست کرناٹک کے ایک مندر میں بہت سے بچوں کو چھت سے نیچے اچھالا جاتا ہے اور نیچے بچوں کو پکڑنے کے لئے مرد ایک جال لے کر کھڑے ہوتے ہیں۔ہندو لوگوں کا ماننا ہے کہ ایسا کرنے سے بچوں کی صحت اچھی ہوتی ہے اور مزید بچوں کے لئے بھی ایسا کیا جاتا ہے۔

فوڈ رولنگ:

ہندوستان کے شرمناک اور عجیب و غریب رسم و رواج
ہندوستان کے شرمناک اور عجیب و غریب رسم و رواج


یہ رسم بھی ہندوستان کے مختلف علاقوں خصوصاً کرناٹک ریاست کے مندروں میں منائی جاتی ہے اگر آپ کو ایسے مندروں میں جانے کا اتفاق ہو تو آپ کو روک کر زمین پر لیٹنے اور اس پر رول یا گھومنے کا حکم صادر کیا جائے گا اور فرش پر ایس غذا بکھری ہوتی ہے جنہیں برہمن پھینک دیتے ہیں۔اور اس سے نچلی ذاتوں پر یہ رسم ادا کرنا فرض ہے اور ان کا ماننا ہے کہ اس سے جلدی امراض بھی ٹھیک ہو جاتے ہیں

کھونٹے پر لٹکنا:

ہندوستان کے شرمناک اور عجیب و غریب رسم و رواج
ہندوستان کے شرمناک اور عجیب و غریب رسم و رواج


ہندوستان میں تھولم نامی ایک فیسٹول منایا جاتا ہے جس میں لوگ تیز دھار ہکس یا کھونٹوں پر لیٹ جاتے ہیں اور پھر اس کے بعد رسیوں کی مدد سے انہیں زمیں سے اوپر اٹھا کر فضا میں لٹکا دیا جاتا ہے۔مکمل پابندی کے باوجود بھی یہ تسم مختلف علاقوں میں منائی جاتی ہے۔

مرغیوں سے جادو کرنا:

ہندوستان کے شرمناک اور عجیب و غریب رسم و رواج
ہندوستان کے شرمناک اور عجیب و غریب رسم و رواج


ہندوستانی تاریخ پر نظر دوڑائی جائے تو جادو کرنا ان کی روایات کا حصہ رہا ہے اور اس کے لئے مختلف طریقے اپنائے جاتے ہیں لیکن ایک طریقہ یہ ہے کہ اس کے لئے سفید مرغی کو کاٹا جاتا ہے اور اس کے ٹکڑے عمل کروانے والے کے گھر کے آس پاس بکھیر دیے جاتے ہیں کیونکہ ان کا ماننا ہے کہ بدروحیں سفید مرغی سے ڈرتی ہیں۔

زبان چھیدنا:

ہندوستان کے شرمناک اور عجیب و غریب رسم و رواج
ہندوستان کے شرمناک اور عجیب و غریب رسم و رواج


ہندوستان میں منائی جانے والی یہ رسم اپنی خواہشات کی تکمیل کے لئے مختلف میلوں میں ادا کی جاتی ہے جس میں سوئیوں کی مدد سے زبان کو چھیدا جاتا ہے یہ سوئیاں عام طور پر لکڑی یا سٹیل سے بنی ہوتی ہیں۔

لڑکیوں کی نسل کشی کرنا:

ہندوستان کے شرمناک اور عجیب و غریب رسم و رواج
ہندوستان کے شرمناک اور عجیب و غریب رسم و رواج


یہ برائی ویسے تو بہت سے معاشروں میں پائی جاتی ہے لیکن ہندوستان اس میں سرفہرست ہے جس میں لڑکیوں کی بجائے لڑکوں کو ترجیح دی جاتی ہے اور لڑکیوں کو پیدائش سے قبل ماں کے پیٹ میں یا پیدائش کے بعد ان معصوم کلیوں کو ہلاک کر دیا جاتا ہے افسوس ناک امر یہ ہے کہ اس پر پابندی کے باوجود اس امر کی روک تھام نہیں کی جا سکی۔ 


No comments:

Post a Comment