Subscribe Us

Breaking

Thursday, March 10, 2022

کرکٹ قوانین میں تبدیلیاں

کرکٹ قوانین(Rules) میں تبدیلیاں
cricket new rules 2022,new cricket rules 2022 in urdu

انٹرنیشنل کرکٹ کونسل نے کرکٹ کے اصولوں میں تبدیلیاں کرنے کا فیصلہ کیا ہے اور کچھ نئے اصول بنائے ہیں جو کہ یکم اکتوبر 2022ء سے لاگو کیے جائیں گے۔

اب آپ کو کھیل کے میدان میں بہت سی تبدیلیاں نظر آئے گی جس کا فیصلہ کر لیا گیا ہے اور باضابطہ طور پر یکم اکتوبر 2022ء سے لاگو کیا جائے گا۔

اصول نمبر 1:

جو پہلی تبدیلی کی گئی ہے وہ گیند کو چمکانے کے متعلق ہے پہلے کھلاڑی اپنی تھوک(sliva) کے ذریعے گیند کو شائن کرتے تھے لیکن اب اس پر مکمل طور پر پابندی عائد کر دی گئی ہے۔

کچھ عرصہ پہلے اسے عارضی طور پر بند کیا گیا تھا کووڈ19 کی وجہ سے کیونکہ اس سے کھلاڑیوں میں وائرس پھیلنے کا خدشہ تھا لیکن اب اس پر مکمل طور پر پابندی لگا دی گئی ہے کہ کھلاڑی اب اپنی تھوک(sliva) سے گیند کو شائن نہیں کر سکتے۔

اصول نمبر 2:

کرکٹ کے اصولوں میں جو دوسری تبدیلی کی گئی ہے وہ کیچ آؤٹ ہونے سے متعلق ہے آپ یقیناً جانتے ہوں گے کہ جب کوئی کھلاڑی کیچ آؤٹ ہوتا ہے تو اگر وہ وکٹ کے دوسری طرف پہنچ جاتا ہے تو نیا آنے والا کھلاڑی اسی طرف ہی آ کر کھڑا ہو گا جب کہ نئے اصول میں ایسا نہیں ہو گا نیا آنے والا کھلاڑی ہی سٹرائیک پر آئے گا اور یہ اصول رن آؤٹ ہونے والے کھلاڑی کی صورت میں بھی لاگو ہو گا۔

اصول نمبر 3:

اس اصول کے مطابق کھیل کے دوران اگر کوئی جانور یا کوئی تماشائی گراؤنڈ کے اندر آ جاتا ہے تو اس کو ڈیڈ بال قرار دیا جائے گا جبکہ اس سے پہلے ایسا نہیں تھا۔

اصول نمبر 4:اس اصول کے مطابق اگر فیلڈنگ ٹیم کا کوئی کھلاڑی فیلڈنگ کے کے دوران کوئی چالاکی کرتا ہے اور اپنی جگہ کو تبدیل کرتا ہے تو اس کا خسارہ فیلڈنگ سائیڈ کو بھگتنا پڑے گا،اس سے پہلے تو اس بال کو ڈیڈ بال قرار دے دیا جاتا تھا لیکن اب ایسا کرنے پر پینلٹی کے طور پر بیٹنگ سائیڈ کو پانچ زنز اضافی دے دیے جائیں گے۔

اصول نمبر 5:

اب وائیڈ بال کو لے کر بھی کچھ تبدیلی کی گئی ہے اب اگر کوئی بیٹسمین گیند کی طرف جا کر کھیلتا ہے اور بالر گیند کو اور زیادہ باہر پھینکتا ہے ےو اس میں اب گیند کی وکٹ سے دوری کو نہیں دیکھا جائے گا یعنی جو وائیڈ کی لائں ہے اس کے مطابق وائیڈ نہیں ہو گی اب بیٹ اور گیند کی دوری کی بنا پر وائیڈ بال دی جائے گی۔

اصول نمبر6:

 یہ اصول رن آؤٹ کے متعلق بنایا گیا ہے اس اصول کے مطابق جب بالر بال کرنے کے لئے آتا ہے تو اگر نان سٹرائیک پر کھڑا بیٹسمین بال پھینکنے سے پہلے اپنی کریز سے نکل کر رن لینے کے لئے جاتا ہے تو بالر بال پھنکنے کی بجائے اس لو رن آؤٹ کر دیتا ہے تو اب یہ اصولی طور پر رن آؤٹ ہو گا اس سے پہلے اس طرح سے آؤٹ کرنے پر پلیئر سپرٹ کے خلاف سمجھا جاتا تھا حالانکہ آؤٹ ہو جاتا تھا لیکن اب باقاعہ طور پر یہ اصول بنا دیا گیا ہے کہ اس طرح سے آؤٹ کرنے پر بیٹسمین آؤٹ ہوگا اور یہ پلیئر سپرٹ کے خلاف نہیں سمجھا جائے گا 

تو یہ کرکٹ کے کچھ اصول ہیں جو کہ اسی سال یکم اکتوبر سے آپ کو کرکٹ کے میدان میں لاگو ہوتے نظر آئیں گے۔ 

No comments:

Post a Comment